Czech govt expels 18 Russian diplomats over 2014 blast #urduheadline

9


.

روس اور امريکا کے درمیان کشیدہ تعلقات کا اثر دیگر ممالک پر بھی پڑنے لگاہے۔ پولينڈ کے بعد جمہوريہ چيک نے بھی روس کے 18 سفارت کاروں کو ملک چھوڑنے کا حکم دے ديا۔

مشرقی يورپ ميں ممالک کے درمیان تعلقات میں تبدیلی آرہی ہے۔ امريکا اور روس محاذ آرائی ميں ديگر ممالک بھی شامل ہوگئے ہیں۔

پہلے پولينڈ نے روس کے 3 سفارت کاروں کو ملک بدر کيااوراب جمہوريہ چيک نے 18 روسی سفارت کاروں کو ملک چھوڑنے کا حکم دے ديا۔چيک جمہوريہ کے وزيراعظم نے ٹيلی ويژن پر خطاب ميں روس پر سال 2014 ميں ہونے والے بم دھماکوں ميں ملوث ہونے کا الزام لگايا۔

آندرج بابيس نے ٹوئيٹ کيا کہ انٹيلی جنس ايجنسيوں کے واضح شواہد ہيں کہ روسی خفيہ ايجنسيوں کے افسران بم دھماکوں ميں ملوث تھے۔18 ايسے روسی سفارت کاروں کی بھی شناخت کی گئی ہےجوروسی خفيہ ايجنسی کے ليے کام کررہے تھے۔اس وجہ سے ان سفارت کاروں کو48 گھنٹوں ميں چيک جمہوريہ چھوڑنے کا حکم ديا گيا ہے۔



#urduheadline



.

Leave A Reply

Your email address will not be published.