Coronavirus: Oxygen cylinder rate increase in Lahore #urduheadline

4


فوٹو: ٹوئٹر

کرونا کی تیسری لہر کے دوران لاہور خاص طور پر اس وباء نشانہ بنا ہوا ہے، مریض بڑھے تو آکسیجن گیس کی فروخت بھی تیز ہوگئی، جس سے شہر میں آکسیجن کی طلب اور قیمتوں میں اضافہ ہوگیا، گیس فلنگ پلانٹس پر عوام کا رش نظر آرہا ہے۔

پاکستان میں کرونا کیسز کی کل تعداد 6 لاکھ 72 ہزار سے تجاوز کرچکی ہے اور وینٹی لیٹر پر موجود مریضوں کی تعداد میں بھی اضافہ ہوگیا ہے، جس کی وجہ سے آکسيجن کی طلب بھی بڑھ گئی۔

لوگوں کا کہنا ہے کہ آکسیجن گیس کی دستیابی میں تو کوئی مسئلہ نہیں مگر قیمت میں اضافہ مسلسل جاری ہے، پہلے سلنڈر میں گیس 250، 300 روپے میں بھرجاتی تھی، مگر اب 500 سے 600 روپے لگ جاتے ہیں، ہم اپنے بچوں کو کھلائیں پلائیں یا آکسیجن گیس کا خرچ اٹھائیں۔

دوسری طرف آکسیجن پلانٹ مالکان کہتے ہیں کہ گیس کی طلب بڑھنے کے ساتھ کمپنیاں بھی قیمت بڑھا دیتی ہیں، اگلے ہفتے گیس کی قیمت مزید بڑھنے کا خدشہ ہے۔

آکسیجن فلنگ پلانٹ کی منیجر حنا خان کا کہنا ہے کہ گیس کی طلب میں 95 فیصد تک اضافہ ہوچکا ہے، کمپنیوں نے قیمت میں اضافہ کردیا ہے۔



#urduheadline



.

Leave A Reply

Your email address will not be published.