اک روشن دماغ تھا نہ رہا (حصہ سوم) جنید جمشید

جے ڈاٹ اور وائٹل سائن کے بانی جنید جمشید 7 دسمبر 2016 کو پی آئی اے طیارے کے حادثے میں جہان فانی سے کوچ کر گئے۔

اک روشن دماغ تھا نہ رہا (حصہ سوم) جنید جمشید

جنید جمشید پاکستان اور دنیا بھر میں ایک جانی پہچانی شخصیت تھے دنیا انہیں ایک گلوکار ،مبلغ اور ڈریس ڈیزائنر کے حوالے سے جانتی ہے۔جنید جمشید نے اپنے کیریئر کا آغاز گلوکاری سے کیا انہوں نے اپنے دوستوں کے ساتھ مل کر ایک بینڈ بنایا جس کا نام وائٹل سائن رکھا۔وہ پاکستان ایئر فورس کے ساتھ بطور انجینئر بھی کام کر چکے ہیں۔

ان کا پہلا البم وائٹل سائن ون اپنے گانے دل دل پاکستان کی وجہ سے بہت زیادہ مقبول ہوا۔انہوں نے 2002 میں ایک نیا گانا دل کی بات بنایا جو کہ بہت زیادہ مشہور ہوا۔2004 میں انھوں نے گلوکاری اور انجینئرنگ دونوں شعبہ ترک کر دیئے۔

اس کے بعد وہ ایک تبلیغی جماعت سے منسلک ہو گئے ایک مذہبی انسان اور مبلغ کے طور پر اپنے نئے کیریئر کا آغاز کیا۔اس دوران انہوں نے اپنے کپڑے کے کاروبار کا آغاز کیا اور جے ڈاٹ کے نام سے برینڈ شروع کیا۔اپنی اس نئی زندگی میں وہ دنیا بھر میں تبلیغی سرگرمیوں کے لئے سفر کرتے تھے۔

حکومت پاکستان نے انہیں ان کی خدمات کے سلسلے میں ستارہ امتیاز اور تمغہ امتیاز سے نوازا۔۔ وہ چترال میں تبلیغی سرگرمیوں کے لیے موجود تھے ان کا طیارہ چترال سے اسلام آباد واپس آ رہا تھا۔اس طیارے میں جنید جمشید سمیت 661 لوگوں کی وفات ہوگئی۔۔۔