کیا بیک فٹ پر کھیلنا عمران خان کی مجبوری یا پھر سیاسی حکمت عملی؟؟

وزیرآباد میں ہونے والے قاتلانہ حملے کے بعد عمران خان نے اپنے بیانیے سے پیچھے ہٹنا شروع کر دیا ہے۔

کیا بیک فٹ پر کھیلنا عمران خان کی مجبوری یا پھر سیاسی حکمت عملی؟؟

وزیرآباد میں ہونے والے قاتلانہ حملے کے بعد دیے گئے غیر ملکی ٹی وی چینلز  کو دیے گئے انٹرویو میں عمران خان نے پہلے اپنے امریکی سازش کے بیانیے سے یوٹرن لیا۔امریکی سازش کے بیانیے پر غیر ملکی ٹی وی چینل کو دیئے گئے انٹرویو میں عمران خان کا کہنا تھا وہ اب ماضی کی بات ہو چکی عمران خان امریکہ سے بہتر تعلقات کے حامی ہیں ہیں۔

اس کے بعد ایک اور غیر ملکی ٹی وی چینل دی ٹیلی گراف کو انٹرویو دیتے ہوئے عمران خان نے اسٹیبلشمنٹ کےساتھ ہیں بیانیے سے بھی یوٹرن لے لیا۔عمران خان کا کہنا تھا وہ مانتے ہیں اسٹیبلشمنٹ سازش میں ملوث نہیں تھی لیکن وہ حکومت کے خلاف ہونے والی سازش کو روک تو سکتی تھی۔

عمران خان کے بیانیہ میں تبدیلی کے بعد بعد چند سوال جو ذہن میں آتے ہیں کیا عمران خان بیک فٹ پر کھیل رہے ہیں؟؟؟کیا عمران خان کے آرمی کے ساتھ معاملات حل ہو چکے ہیں؟؟یاب اپنے بیانیے سے پیچھے ہٹنا عمران خان کی مجبوری ہے؟؟؟اس ساری صورتحال میں تحریک انصاف کا سپورٹر کہاں کھڑا ہے اور خان صاحب اسے کیا نظریہ دیں گے اور وہ کس نظریے کو سپورٹ کرے گا گا؟؟خان صاحب کا سپورٹر اس یوٹرن کو کس نظر سے دیکھتے ہیں؟؟

اس آرٹیکل کو پڑھنے کے بعد آپ ہمیں اپنی قیمتی رائے سے آگاہ کیجئے کہ آپ اسے عمران خان کی سیاسی حکمت عملی سمجھتے ہیں کہ مجبوری؟؟