ڈاؤن لوڈنگ کہاں سے نہیں کرنی؟ واٹس ایپ صارفین ہوشیار

واٹس ایپ کے استعمال سے موبائل فون صارفین کو بہت سی سہولیات ایک ہی پلیٹ فارم پر میسر ہیں، تاہم کچھ شرپسند عناصر اس سہولیات کا غلط فائدہ اٹھانے کی کوشش کرتے ہیں۔ کچھ لوگ ایسے بھی ہیں جو واٹس ایپ کے ذریعے جعلی ورژن اور کلون ایپس بنا رہے ہیں، اس لیے صارفین کو […]

ڈاؤن لوڈنگ کہاں سے نہیں کرنی؟ واٹس ایپ صارفین ہوشیار
واٹس ایپ

واٹس ایپ کے استعمال سے موبائل فون صارفین کو بہت سی سہولیات ایک ہی پلیٹ فارم پر میسر ہیں، تاہم کچھ شرپسند عناصر اس سہولیات کا غلط فائدہ اٹھانے کی کوشش کرتے ہیں۔

کچھ لوگ ایسے بھی ہیں جو واٹس ایپ کے ذریعے جعلی ورژن اور کلون ایپس بنا رہے ہیں، اس لیے صارفین کو بہت محتاط رہنے کی ضرورت ہے۔

اس سلسلے میں دنیا کی سب سے مقبول میسجنگ ایپ واٹس ایپ کے سی ای او نے صارفین کو مشورہ دیا ہے کہ وہ واٹس ایپ کے جعلی یا تبدیل شدہ ورژن استعمال نہ کریں۔

اس قسم کے حملوں سے بچنے کیلئے ضروری ہے کہ اپنے موبائل فون سے ایسی کوئی ایپ بھی ڈاؤن لوڈ نہ کی جائے جس کے متعلق آپ کو مکمل علم نہ ہو۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق میٹا کی ملکیت واٹس ایپ اس وقت دنیا کی سب سے بڑی میسجنگ ایپ ہے اسی سبب اس کے جعلی ورژن بھی زیادہ ہیں جس سے بچنا ضروری ہے۔

اب واٹس ایپ کے سربراہ نے بھی خطرناک وارننگ جاری کردی ہے، لہٰذا کسی بھی نقصان سے محفوظ رہنے کیلئے صارفین کو بھی اسے سنجیدہ لینا چاہیے۔

ان کا کہنا ہے کہ کوئی بھی ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے صرف گوگل پلے اسٹور استعمال کریں کسی اور ویب سائٹ سے کسیہ بھی قسم کی ڈاؤن کوڈن نہ کی جائے۔

آپ کا ردعمل کیا ہے؟

like
0
dislike
0
love
0
funny
0
angry
0
sad
0
wow
0