نہر سوئز سے متعلق بڑا قدم – #urduheadline

0


قاہرہ: مصر نے دنیا کی مصروف ترین تجارتی گزرگاہ نہر سوئز کو چوڑا کرنے پر غور شروع کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق نہر سوئز میں بحری جہاز پھنسنے کے واقعے کے بعد مصر نے اس شپنگ چینل کو وسعت دینے پر غور شروع کر دیا ہے۔

اس سلسلے میں سوئز کینال اتھارٹی کے چیئرمین اسامہ ربی نے کہا ہے کہ نہر کے شپنگ چینل کو چوڑا کرنے پر غور ہو رہا ہے، انھوں نے کہا کہ چینل کی بندش سے ہونے والے نقصانات اور ہرجانے کی مالیت ایک بلین ڈالرز تک پہنچ سکتی ہے۔

ادھر کینال اتھارٹی کے ریسکیو آپریشن میں کام کرنے والے اہل کاروں کا کہنا تھا کہ نہر میں پھنسنے والے ایور گرین جہاز کے کپتان نے غلطی کی تھی جس کے بعد جہاز اپنے راستے سے ہٹ گیا اور کنارے میں پھنس گیا، اس سے قبل یہاں سے اسی موسمی حالات میں 12 جہاز گزر گئے تھے اور انھیں تیز ہوا اور طوفان سے کوئی مسئلہ نہیں ہوا۔

نہر سوئز : راستہ کھلنے کے باوجود ڈھائی سو جہاز اپنی باری کے منتظر

خیال رہے کہ نہر سوئز میں پھنسے دیو ہیکل کنٹینر شپ کو پیر کو نکالا گیا تھا، تاہم اب بھی اس راستے سے گزرنے کے لیے جہازوں کی لمبی قطاریں لگی ہوئی ہیں، اب تک 281 مال بردار جہاز اپنی منزل کی جانب روانہ ہو چکے ہیں، جب کہ 249 بحری جہازوں کا نکلنا باقی ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ اس ٹریفک جام کو ختم ہونے کے باوجود تمام تجارتی جہازوں کو یہاں سے گزرنے میں مزید 10 دن لگ سکتے ہیں، جب کہ منگل کے روز مصر کے صدر نے کہا تھا کہ اس میں محض 3 دن لگیں گے۔

Comments


#urduheadline



.

Leave A Reply

Your email address will not be published.